حاحِ ستہ سے مراد حدیث پاک کی چھ مشہور و معروف مستندکتابیں ہیں: ان چھ کتابوں کو ”اصولِ ستہ، صحاحِ ستہ، کتبِ ستہ اور امہاتِ ست“ بھی کہتے ہیں [3] حدیث کے 6 مستند اور مشہور مجموعوں کو صحاح ستہ کہا جاتا ہے۔ ان کتابوں کو اسلامی تعلیم سمجھنے میں بنیادی اہمیت حاصل ہے۔ یہ کتابیں مندرجہ ذیل ہیں:
1۔ صحیح بخاری (امام بخاری)
محمد بن اسماعیل البخاری جنہوں نے حدیث کی مستند ترین کتاب صحیح بخاری مرتب کی، اس کتاب کو مرتب کرنے میں اُنہیں سولہ (16) سال کا عرصہ لگا۔ روایتوں سے پتہ چلتا ہے کہ امام بخاری کسی بھی حدیث کو محفوظ کرنے سے پہلے غسل کرکے نوافل پڑھتے اور پھر حدیث کو محفوظ فرماتے۔ امام بخاری کا انتقال 256ھ/70-869ء کو سمرقند میں ہوا۔
2۔ صحیح مسلم (امام مسلم)
مسلم بن حجاج النیشاپوری: جن کا انتقال 261ھ/5-874 کو نیشاپور میں ہوا۔ انہوں نے حدیث کی دوسری مستند ترین کتاب صحیح مسلم مرتب کی۔
3۔ جامع ترمذی (امام ترمذی)
ابو عیسٰی محمد بن ترمذی: جنہوں نے مشہور ترمذی شریف مرتب کی۔ آپ امام بخاری کے شاگرد تھے۔ آپ کا انتقال 279ھ/3-892ء میں ہوا۔
4۔ سنن ابی داؤد (امام ابو داؤد)
أبو داود سليمان بن الأشعث بن إسحاق بن بشير الأزدی السجستانی: ایک عرب نژاد فارسی جن کا اانتقال 275ھ/9-888ء میں ہوا۔
5۔ سنن نسائی (امام نسائی)
احمد بن شعيب النسائی جو خراسان سے تھے اور 303ھ/16-915ء میں انتقال کرگئے۔ اُنہوں نے حدیث کی معروف کتاب سنن نسائی ترتیب دی۔
6۔ سنن ابنِ ماجہ (امام ابنِ ماجہ)
محمد بن يزيد ابن ماجہ: ان کا انتقال 273ھ/87-886ء میں ہوا۔
Source: https://ur.wikipedia.org/wiki/صحاح_ستہ

Sorry, there are no posts found on this page. Feel free to contact website administrator regarding this issue.